Urdu Khabrain
Urdu Khabrain is the world most populated Urdu News website. You can find and read daily Urdu news.

دو، دو ہزار پائونڈ کے بدلے ہزاروں طالب علموں کو برطانوی یونیوسٹی کی کیمیکل انجینئرنگ کی جعلی ڈگریاں بٹتی رہیں،پیسے بیرون ملک منتقل ہوتے رہے وفاقی وزیر’ اعظم سواتی‘ کا ایک اور سکینڈل منظر عام پر ، جانئے انوکھے فراڈ کی داستان

0

اسلام آباد وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی سینیٹر اعظم سواتی کا ایک اور سکینڈل سامنے آگیا، کامسیٹس یونیورسٹی میں کیمیکل انجینئرنگ کی دوہری ڈگری کی مد میں ایک ارب روپیہ بیرون ملک ٹرانسفر، طلبہ سے ڈگری کے بجائے پرنٹڈ کاغذ کے بدلے دو ہزار پائونڈ مزید کا مطالبہ، طلبہ نے لائیو پروگرام میں جعلی ڈگریاں پھاڑ ڈالیں۔تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی پروگراممیں انکشاف سامنے آیا ہے

کہ کامسیٹس یونیورسٹی کیمیکل انجینئرنگ کی جعلی دوہری ڈگری طلبہ میں بانٹتی رہی اور اس مد میں ایک ارب روپے بیرون ملک ٹرانسفر کئے گئے ہیں۔ کامسیٹس یونیورسٹی میں کیمیکل انجینئرنگ کی دوہری ڈگری کا پروگرام اعظم سواتی کے دور میں شروع کیا گیا جب وہ پیپلزپارٹی دور میں وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی تھے ۔ انہوں نے اس حوالے سے ایک ایم او یو پر دستخط بھی کئے تھے۔ نجی ٹی وی ایکسپریس نیوز کے پروگرام آن دی فرنٹ میں اینکر منصور علی خان کے ہمراہ متاثر طلبہ نے اس حوالے سے سنسنی خیز انکشافات کئے ہیں۔

ایک طالب علم نے ساری کہانی سے پردہ اٹھاتے ہوئے بتایا کہ کامسیٹس یونیورسٹی ہمیں جو ڈگریاں دے رہی ہے اس کو نہ تو ہائر ایجوکیشن کمیشن ماننے کو تیار ہے اور نہ ہی پاکستان انجینئرنگ کونسل اس کو مان رہی ہے۔ طالب نے بتایا کہ یہ ڈگری لنکاسٹر یونیورسٹی یوکے کی ہے جو کہ یونیورسٹی انتظامیہ نے ہمیں دو ہزار پائونڈ کے بدلے دی ہے جو کہ ایک صرف پرنٹڈ کاغذ پر مشتمل ہے ۔ ہمیں یہ بتایا گیا تھا کہ یہ عالمی طور پر مانی جانیوالی ڈگری ہو گی ۔ طالب علم کا کہنا تھا کہ اس ڈگری پروگرام کیلئے یونیورسٹی نے باقاعدہ مارکیٹنگ کی اور اس حوالے سے لوگوں کی ہائرنگ بھی کی گئی تھی۔ اخبارات میں اشتہارات تک دئیے گئے تھے اور اس پروگرام کی مارکیٹنگ میں بہت پیسہ لگایا گیا تھا۔ طالب علم کا کہنا تھا

کہ 2010میں اس پروگرام میں کو شروع کرنےاور مینج کرنے میں اس وقت کے وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی اعظم سواتی کا بڑا کلیدی کردار تھا جو کہ آج بھی وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی ہیں۔ آج وہ تحریک انصاف میں ہیں جبکہ اس وقت وہ پیپلزپارٹی کی حکومت میں وزیر تھے(اعظم سواتی 2010میں جمعیت علمائے اسلام(ف)میں شامل تھے اور جمعیت علمائے اسلام (ف) اس وقت پیپلزپارٹی حکومت میں اتحادی تھی )۔ طالب علم کا کہنا تھا کہ آج بھی اعظم سواتی نے نہایت دلچسپ بات ہے کہ وہی وزارت دوبارہ حاصل کر لی ہے شاید وہ اپنی اس قسم کی چیزوں کو مینج کرنا چاہ رہے ہیں اور یہ کوئی الزام نہیں بلکہ ہم ان کی شروع کی گئی

ایک چیز کے متاثرہ ہیں۔ دو دو سال سے ہم گریجویٹ ہو کر بیٹھے ہیں اور اس ڈگری کی وجہ سے کوئی ان کو پوچھ نہیں رہا۔ طالب علم کا کہنا تھا کہ اب بھی مزید طالب علموں سے اس جعلی ڈگری کیلئے دو ہزار پائونڈ کا مطالبہ کیا جا رہا ہے جبکہ وہ بھی یہ بات جانتے ہیں کہ اس کی کوئی وقعت نہیں۔ اینکر منصور علی خان نے طالب علم سے سوال کیا کہ آپ سے دو ، دو ہزار پائونڈ مانگے جا رہے ہیں آپ کتنے طالب علم ہیں جس پر طالب علم نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ شروع میں اس پروگرام کو 7مراحل میں شروع کیا گیا

Loading...

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

تبصرے