چین میں تجارتی اور اقتصادی اصلاحات کے نفاذ کا اعلان

0

چین کے صدر شی جن پنگ نے منگل کے روز چین کی منڈی کو آزاد بنانے کے عمل کے چالیس سال مکمل ہونے کے موقعے پر خطاب کرتے ہوئے اصلاحات پر عمل درآمد کے عزم کا اظہار کیا ۔تاہم انہوں نے ان خصوصی اقدامات کا ذکر نہیں کیا جن کا شدت سے انتظار کیا جا رہا تھا۔

صدر شی نے اپنی طویل تقریر میں سرکاری معیشت کی حمایت کے ساتھ ساتھ نجی شعبےکی نمو پر بھی بات کی۔ انہوں نے کہا کہ چین اپنی منڈیوں کو مزید آزاد کرنے کی کوششوں کو وسعت دینے کا عمل جاری رکھے گا، اور بنیادی اصلاحات کے نفاذ کو یقینی بنائے گا۔

بیجنگ میں قائم گریٹ ہال آف دی پیپل میں خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہم ثابت قدمی کے ساتھ سرکاری معیشت کی ترقی کو مستحکم رکھیں گے اور اس کے ساتھ پوری توانائی سے نجی شعبے کی معیشت کو بھی تقویت دیں گے۔

چالیس سال قبل چین کے لیڈر آنجہانی ڈینگ ژاؤ پنگ نے اصلاحات اور آزاد منڈی کی مہم چلائی تھی۔ اور اسی کی وجہ سے چین نے شاندار صنعتی ترقی کی اور اب یہ دنیا کی دوسری بڑی معیشت بن چکا ہے۔ اس موقعے پر خطاب کرتے ہوئے صدر شی نے کہا کہ نئے امکانات کے کھلنے سے ترقی ہوتی ہے جبکہ خود کو مقید رکھنے سے پسماندگی پیدا ہوتی ہے۔

صدر شی نے کمیونسٹ پارٹی کے کردار پر بات کرتے ہوئے کہا کہ اصلاحات اور کھلے پن کا ہر اقدام آسان نہیں ہے۔ مستقبل میں ہمیں ہر قسم کے خطرات اور چیلنجوں کا سامنا ہو گا،یہاں تک کہ ہمیں ناقابلِ تصور اور ہنگامہ خیزطوفانوں کا سامنا بھی ہو سکتا ہے۔

صدر شی کا خطاب ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے، جب اصلاحات اور غیر ملکی کمپنیوں کو منڈی تک رسائی دینے کیلئے دباؤ بڑھتا جا رہا ہے، دوسری طرف چین اور امریکہ کے درمیان تلخ تجارتی جنگ سے چین کی معیشت پر منفی اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔

امریکہ کے ساتھ اس کے تنازعہ کا ایک سبب یہ ہے کہ چین اپنے سرکاری شعبے کے تحت قائم تیزی سے بڑھتی ہوئی صنعتی سرگرمیوں کی حمایت کرتا ہے۔

تجارتی جنگ نے چین کی چند کاروباری شخصیات، سرکاری مشیروں اور تھنک ٹینکوں کی جانب سے معاشی اصلاحات میں تیزی لانے اور نجی شعبے کو مزید آزاد کرنے کے مطالبے میں اضافہ کیا گیا ہے۔

صدر شی اور صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اس ماہ نوے دن تک تجارتی جنگ بندی پر اتفاق کیا ہے، جس سے دونوں جانب سے ایک دوسرے کی مصنوعات پر مزید ٹیکس لگانے کا عمل رک گیا ہے، اس دوران فریقین کے درمیان مذاکرات جاری رہیں گے۔

شاید آپ یہ بھی پسند کریں
Loading...
تبصرے
Loading...