آسمانی بجلی گرنے کے واقعات میں 20 افراد ہلاک

مزید خبریں

پاکستان کے صوبے سندھ میں آسمانی بجلی گرنے کے مختلف واقعات میں کم سے کم 20 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے ہیں۔

مقامی ذرائع ابلاغ کے مطابق سندھ کے ضلع تھرپارکر کے مختلف علاقوں مٹھی، اسلام کوٹ کے نواح میں بدھ کو گرج چمک کے ساتھ شروع ہونے والا بارشوں کا سلسلہ جمعرات کو بھی جاری رہا۔

اس دوران آسمانی بجلی گرنے سے خواتین اور بچوں سمیت 20 سے زائد افراد کی ہلاکت کی اطلاعات ہیں۔ آسمانی بجلی گرنے سے سیکڑوں مویشی بھی ہلاک ہو گئے ہیں۔

صحرائی علاقے تھر میں شدید بارش کے باعث رین ایمرجنسی نافذ کر دی گئی ہے۔ بجلی گرنے سے 30 افراد زخمی بھی ہوئے ہیں جنہیں اسلام کوٹ، مٹھی اور چھاچھرو ٹاؤن کے اسپتالوں میں منتقل کیا گیا ہے۔

سندھ کے اس صحرائی علاقے میں تیز بارش کو غیر معمولی قرار دیا جا رہا ہے۔ بارش کے باعث ان علاقوں میں سردی کی شدت میں بھی اضافہ ہو رہا ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق نگرپارکر کے علاقے میں جمعرات کی شام تک 27 ملی میٹر بارش ریکارڈ کی جا چکی ہے۔

سندھ کے دیگر شہروں میر پور خاص، سکھر اور گھوٹکی میں بھی موسلا دھار بارش کے باعث نظام زندگی متاثر ہوا ہے۔ ٹھل، کندھ کوٹ، کشمور اور گھوٹکی میں گرد کے طوفان کے بعد موسم سرما کی پہلی بارش ریکارڈ کی گئی ہے۔

Loading...

Comments are closed.